جمعرات, نومبر 22, 2007

تارے بن کر چمکے ہم (We shine like stars!)

تارے بن کر چمکے ہم

چمک چمک کر بولے رات ستارے

’ڈوبا ہے اندھیارے میں

دنیا کا ہر اک گوشہ

تم ہو کیوں چپ چاپ پڑے

ہم جیسا تم چمکونا !

چمکونا ، چمکونا ، چمکونا !

نکلے تارہ بن کر ہم

چمکے ہم ، چمکے ہم

باغ میں ننھا پھول کھلا

بولا ہم سے :’ مہکو نا

تیز سواری ہے یہ ہوا

خوشبو اس پر لدوا دو

گھر گھر خوشبو پہنچا دو

تم بھی ہم سا مہکو نا

ہاں بھائی ہاں! کہہ کے ہم

پھولوں جیسے مہکے ہم

چوں چوں کرتی اک چڑیا

دیکھ کے ہم کو یہ بولی :

’ٹوٹے دل کو نہ غم دو

تم لوگوں کو مرہم دو

بات ہمیشہ بھلی کہو

تم بھی مجھ سا چہکو نا

کب تک چپ چپ رہتے ہم

چڑیا جیسے چہکے ہم

چڑیا جیسے چہک اٹھے

پھول بنے اور مہک اٹھے

بن کر تارا چمک اٹھے

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں