اتوار, مارچ 07, 2010

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ مزاحیہ نظم ۔۔۔۔۔ کچھ سبق بھی پڑھا ءیںگی باجی


///////////////////////////////////////////////////

باجی

مزاحیہ نظم  

ککککککککککککککککککککک 

محمّد توحید الحق 

کامٹی 

////////////////////////////////////////////////

جب بھی اسکول آٔیں گی باجی 

گھر کی باتیں بتأیں گی باجی

گود میں ہو اگر کوءی بچّہ 

ساتھ اس کو بھی لا ْیں گی باجی

ہو مو باءیل سے جب انھیں فرصت 

کچھ سبق بھی پڑھا ءیںگی باجی

آءینہ پر نگاہ پڑ تے ہی

من ہی من مسکرأیں گی باجی

دیکھ کر دوسروں کاسوٹ نیا

دل کو دن بھر جلأیں گی باجی

کتنی ہیں چھٹّیاں مہینے میں

یاد سب کو دلاءیں گی باجی

آ ج تنخواہ ملی ہے میڈم کو

آج شاپنگ پہ جا ءیں گی باجی

یہ بتانے کو کل تھی سال گرہ

کیک اسکول لاءیں گی باجی

آج چھٹّی پہ ہیں بڑی آ پا

آج گپ شپ لڑاءیں گی باجی

آج اسکول میں جو فنکشن ہے

آ ج بن ٹھن کے آ ءیں گی باجی

گیٹ پر لینے آ ءے  ہیں مسٹر

وہ کھڑے ہیں‘ بتاءیں گی باجی

جب کہ ابّو ہی کر تا دھرتا ہیں

کس کو خاطر میں لا ءٰیںگی باجی 

3 تبصرے: