جمعہ, اکتوبر 03, 2008

غزل


مزاحیہ شاعری 
برا وقت 

ہر گھڑی میں وقت ہے بالکل غلط 
واچ میکر کی یہ اک دکان ہے 
جیسے قومی رہنما کی زندگی 
رہنما ئی کا جہاں فقدان ہے 

غزل

میاں شریف یہاں تو تمہارے لالے ہیں 
قدم قدم پہ کمینوں سے پا لا پڑنا ہے 

لبوں سے اس کے چنبیلی کے پھول جھڑ نے ہیں 
ہمارے منہ پہ علی گڑھ کا تالا پڑنا ہے 

کھنک سے مال کے اک بھیڑ سی امڈنی ہے 
اب اس کے چہرے کے گرد ایک ہالا پڑنا ہے 

گنے ہیں لاکھ ٹکے تب ملی ہے یہ سروس 
دیارِ علم میں اب کیا اجالا پڑنا ہے


کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں